کیا جنت میں نکاح ہوگا؟

جنت میں حوریں ملیں گی۔ اللہ تعالٰی نے اتنی خوبصورت حوریں بنائیں ہیں۔ اللہ نے عیاشی کے لیے جنت بنا ئی ہے۔ وہ ایسی عیاشی ہو گی۔ جو کسی آنکھ نے نہ سنی اور نہ دیکھی ہوگی۔ قرآن میں اللہ تعالیٰ فرماتا ہے کہ ہمارے نیک بندے رات کو انکے بستر پہلوؤ ں سے جدا ہوتےہیں۔اور مصلحے پر کھڑے ہو کر اللہ کو پکارتے ہیں۔ اللہ تعالیٰ فرماتا ہے کہ جہنم کے خوف سے اور جنت کی لالچ سے پکارتے ہیں۔ اللہ تعالیٰ فرماتا ہے کہ ان آنکھوں کی ٹھنڈک کا کیسا سامان چھپا کر رکھا ہے۔

چھپانے کا مطلب یہ ہے کہ اگر چھپاتا نہیں توساری دنیا اُٹھ کر گناہوں کی معافی مانگ رہی ہوتی۔ ایک مزدور رات کوتہجدکے لیے اُٹھا باقی سارے کمبلوں میں سورہے ہیں۔ تو رات کے آخری حصہ میں اُٹھ کر اللہ سے معافی مانگ رہاہے۔ ساری دنیا سو رہی ہے اے اللہ میں نے بھی اتنی ہی محنت کی جتنی انھوں نے کی میں بھی اتنا ہی جاگا جتنایہ جاگےاور میں اکیلا ہاتھ اُٹھ کرمعافی کی دعا مانگ رہاہوں۔ یہ آنکھوں کی ٹھنڈک کا سامان جسے اللہ نے چھپاکر رکھا ہے۔ اللہ تعالیٰ فرماتا ہے کہ ہم تمہیں خوش کرنے کے لیے نہیں کھلارہے بلکہ اللہ کو خوش کرنے کے لئے کھلارہے ہیں۔ ایک اور جگہ فرماتا ہے ایک دن بہت سخت میدانِ حشر کا آنے والا ہے۔

ہم تمہیں اس لئےکھلا رہے ہیں کہ آج ہم تمہاری پریشانیوں کو دور کریں گے۔علماء کہتے ہیں جیساعمل ہوتا ہے بدلہ ویسا ملتاہے۔ جب انسان فتنہ میں پڑتا ہے سب کچھ بھول جاتا ہے گمراہ ہوجاتاہے ۔ اس لیے جلد نکاح کا حکم ہے۔ اگر آج ہم خود کو گناہوں سے بچائیں گے تو جنت میں حوریں ملیں گے۔ اور خود کو ماں باپ کی نافرمانی سے بچایااور کبھی باپ پرزبان نہیں چلائی اور کبھی عورت پر ہاتھ نہیں اُٹھایااور کڑوا گھونٹ پیتا رہا۔ اور کبھی کمزور عورت پر ہاتھ نہیں اُٹھایا اور کڑوا گھونٹ پیتا رہا۔

تو انسان جتنی بار کڑوے گھونٹ کو برداشت کرتا رہے گا اسکو جنت میں حو ر کا وعدہ ہے۔ حضرت نوحؑ جب کشتی بنا رہے تھے تو لوگوں نے مذاق اڑایا نہ سیلاب کا خطرہ ہے نہ پیش گوئی ہے نہ کوئی سمندر ہے جو اُمنڈ کے آرہا ہے۔ تو حضرت نوحؑ نے کہا تو اڑاؤ میرا مذاق عنقریب ہم تمہارا مذاق اڑائے گے ۔ تو جس کو حور چاہیے تو اسکو چاہیے کہ اس کا مہر ادا کرے۔ تو وہ مہر یہ ہے کہ کبھی ماں، باپ اور بیوی کے سامنے غصہ نہ کرےاور خود کو گناہوں سے بچائے۔

About soban

Check Also

سلطان علاؤ الدین کی تلوار اندھی اورجلاد کی طرح ہاتھ ۔۔۔۔؟؟؟

دلچسپ و عجیب سلطان علاؤ الدین کی تلوار اندھی تھی اور ہر وقت جلاد کے …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *